Official Website

33
Banner-970×250

باجوڑ میں پولیو ٹیم پر حملہ، ڈاکٹر شہید اور پولیس اہل کار زخمی
باجوڑ: خیبرپختونخوا کے ضلع باجوڑ میں پولیو ٹیم پر حملے میں کوآرڈینیٹر ڈاکٹر شہید جبکہ پولیس اہل کار زخمی ہوگیا۔ریسکیو 1122 کے مطابق باجوڑ کی تحصیل لوئی ماموند کے علاقے باد سیاہ میں نامعلوم افراد نے گاڑی پر فائرنگ کی، جس میں 2 افراد شدید زخمی ہو گئے تھے۔زخمیوں میں پولیو کوآرڈینیٹر ڈاکٹر عبدالرحمٰن اور ایک پولیس اہلکار الیاس شامل تھا جنہیں ریسکیو 1122 کے ذریعے تشویشناک حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا۔عبدالرحمٰن دوران علاج جانبر نہ ہوسکے اور دم توڑ گئے جبکہ پولیس اہلکار کی حالت بدستور تشویشناک ہے۔دوسری جانب وفاقی وزیر صحت ڈاکٹر ندیم جان نے باجوڑ میں پولیو آفیسر ڈاکٹر عبدالرحمن پر حملے اور شہادت کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر عبدالرحمن کی شہادت پر انتہائی افسردہ ہوں، حملے کی خبر ملتے ہی ڈاکٹر عبدالرحمن کے اہل خانہ سے مسلسل رابطے میں رہا اور انہیں طبی امداد کیلیے اسلام آباد منتقل کرنے کی بھی ہدایت کی تاہم وہ دوران علاج جانبر نہ ہوسکے۔انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر عبدالرحمن کے قاتلوں کو ہر صورت کٹہرے میں لا کر نشان عبرت بنائیں گے، ایسی بزدلانہ کارروائیاں ہمارے عزم اور جذبے کے آڑے نہیں آسکتیں۔دریں اثنا گورنر خیبر پختونخوا حاجی غلام علی نے باجوڑ میں پولیو ڈیوٹی پر مامور ڈاکٹر کی گاڑی پر فائرنگ کے واقعے کا فوری نوٹس لے لیا اور ڈپٹی کمشنر باجوڑ سے ٹیلیفونک رابطہ کرکے واقعے کی تفصیلات حاصل کیں۔ڈی سی نے ٹیلی فونک بریفنگ میں بتایا کہ پولیو ڈیوٹی پر مامور ڈاکٹر عبدالرحمن کی گاڑی پر فائرنگ کی گئی جس سے ڈاکٹر عبدالرحمن اور ان کا ڈرائیو زخمی ہوئے ہیں۔ ڈاکٹر عبدالرحمن شدید زخمی ہیں جنہیں علاج کے لیے فوری طور پر پشاور منتقل کرنا ہے۔ گورنر کے پی حاجی غلام علی نے ڈاکٹر عبدالرحمن کو پشاور منتقل کرنے کے لیے ہیلی کاپٹر فراہم کرنے کی ہدایت کی، جس پر چیف سیکرٹری نے کور ہیڈ کوارٹر پشاور آفس سے رابطہ کرلیا۔کور ہیڈ کوارٹر نے ہیلی کاپٹر مہیا کرنے کی درخواست منطور کرتے ہوئے فوری طور پر ہیلی کاپٹر بشمول 2 ڈاکٹر ز باجوڑ روانہ کردیے۔ گورنر کے پی کی ہدایت پر ڈاکٹر عبدالرحمن کو سی ایم ایچ پشاور میں علاج کے لیے منتقل کیا جائے گا ۔